2021 College News Latest News

ری فیکیشن میں کٹوتیوں کا قانونی جواز فراہم کریں ۔عدالت کاحکم

آج سرگودھا ڈویژن کے 42 کالج اساتذہ کی  پنجاب سروس ٹریبونل میں پے اینڈ سروس پروٹیکشن کیس کی سماعت ھوئی جس میں ان اساتذہ کی تنخواہوں میں کٹوتیوں  کو روکنے کے سٹے آرڈر پر عملدرآمد نہ کرنے پر سرکاری وکیل اور سرگودھا اکاؤنٹ آفس کے نمائندہ سے پوچھا  گیا ک آپ ان کی کٹوتی کیوں کر رھے ھیں۔ جس پر انھوں  نے جواب دیا کہ ھم کٹوتی نہیں کررہے بلکہ refixation کی گی ھے۔ جس پر  پنجاب سروس ٹریبونل کے چیرمین نے پوچھا کس پالیسی/نوٹیفکیشن کے تحت  آپ ایسا کر رھے ھیں۔ جس پر سرکاری وکیل اور ڈسٹرکٹ اکاؤنٹ آفس تسلی بخشش جواب نہ دے سکے۔ جس پر ان کو حکم دیا گیا کہ آیندہ پیشی پر اس کا تحریری بیان جمع کروائیں اور ساتھ  متعلقہ پالیسی/نوٹیفکیشن کی کاپی لگائیں۔ آیندہ پیشی 9 نومبر کو ھو گی۔ یاد رھے کہ سرگودھا ڈویژن سے ان تمام اساتذہ نے پے پروٹیکشن اور تاریخ تقرری سے مستقلی کے لے پنجاب ھایٔر ایجوکیشن کے خلاف کیس کر رکھاھے۔ جس میں عدالت سے استدعا کی گی ھے کالج اساتذہ کو مستقل کرتے وقت پے پروٹیکشن دی گی تھی جو بعد میں 2013  میں ایک نوٹیفکیشن کے ذریعے واپس لی گی۔ اس سے قبل پنجاب سروس ٹریبونل اپنے متعدد فیصلوں میں مختلف ڈیپارٹمنٹ کے لوگوں کو پے پروٹیکشن اور تاریخ تقرری سے مستقلی کا حکم دے چکاھے۔ جس میں سکول ایجوکیشن کا فیصلہ قابل ذکر ھے۔ اور پنجاب سروس ٹریبونل کے سکول اساتذہ کے حق میں فیصلہ کو سپریم کورٹ آف پاکستان نے بھی برقرار رکھا ھے۔ ڈاکٹر شیر محمد گوندل جو اس کیس کی پیروی کر رھے ھیں کا کہنا تھا انشاء اللہ جلد ھی کالج اساتذہ کوبھی پے اینڈ سروس پروٹیکشن کا حق عدالت سے ضرور ملے گا کیونکہ ان کا کیس قانونی نقاط کے لحاظ سے کافی مضبوط ھے۔ اس کیس میں کالج اساتذہ کی طرف سے وکیل رضوانہ مفتی پیش ھویں۔

Related posts

لیہ –عدالت نے انصاف دیے دیا پروفیسر کے خلاف ایف آئی آر خارج کر دینے کا حکم

Ittehad

ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز بننے کے خواہش مند 28 دسمبر تک ان لائن اپلائی کریں

Ittehad

کالجز کو ختم کر کے یونیورسٹی بنائے کے خلاف ڈسٹرکٹ بار حافظ آباد نے ہڑتال کا اعلان کر دیا

Ittehad

Leave a Comment