2021 Akhbaar Latest News

ریٹائرمنٹ کی عمر تریسٹھ سال کرنے سے ایک سو چالیس ارب کی بچت ہوتی

خیبر پختونخوا اسمبلی نے دو ہزار انیس میں سول سرونٹ ایکٹ میں ترمیم کر کے ریٹائرمنٹ کی عمر ساٹھ سال سے بڑھا کر تریسٹھ سال کر دی بعض حلقوں کی جانب سے اسے پشاور ہائی کورٹ میں چیلنج کر دیا پشاور ہائی کورٹ نے اس کے خلاف فیصلہ دیتے ہوے ریٹائر منٹ کی حد دوبارہ کرنے کا حکم دیا ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف صوبائی حکومت سپریم کورٹ میں اپیل میں چلی گئی کل سپریم کورٹ نے اسے دوبارہ پشاور ہائی کورٹ کو واپس کر دیا اور ہدایت کی کہ فیصلہ قانون کی مطابقت میں کیا جائے اس پر بیان دیتے ہوئے صوبائی وزیرِ خزانہ خیبرپختونخوا تیمور سلیم جھگڑا نے کہا کہ ایسا وسیع تر عوامی مفاد میں کیا گیا تین سال مدت ملازمت بڑھا دینے سے صوبے کو دس سال میں پنشن کی مد میں ایک سو چالیس ارب  روپے بچ جاتے جھگڑا نے کہا کہ فیصلہ واپس لینے کی صورت میں معاشی صورت حال میں خاصی پچیدگی پیدا ہو جائے گی انہوں نے وضاحت کی کہ جب ریٹائر منٹ کی عمر بڑھی تو ماہانہ پینشن بل چھ سات ارب سے کم ہو کر پانچ ارب رہ گیا یوں صوبے کوچھ ماہ میں تقریباً دس ارب بچ گئے بصورت دیگر اگر ہائیکورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد کیا جائے تو ساڑھے سات ارب ماہانہ کے حساب سے آٹھ ماہ میں مزید تیرہ ارب دینا ہوں گے انہوں نے یہ بھی کہا کہ خیبرپختونخوا کی حکومت ملک کی بہلی حکومت ہے جس نے پینشن سسٹم میں اصلاحات کیا اور سول سرونٹ ایکٹ کو تبدیل کیا

Related posts

پرموشن لنکڈ ٹریننگ کا تین جنوری سے آغاز ۔لیکچررز اور اسسٹنٹ پروفیسرز کو پانچ پانچ کے گروپوں میں تقسیم کیا گیا ہے

Ittehad

پنجاب کے سرکاری و پرائیویٹ  سکولوں میں موسم سرما کی چھٹیوں کا اعلان ،،نوٹیفیکیشن جاری

Ittehad

اتحاد اساتذہ نے مرکزی و ڈویژنل امیدواران کا اعلان کر دیا

Ittehad

Leave a Comment